کوموروس کے صدر غزالی عثمان قاتلانہ حملے میں محفوظ رہے

مورونی:افریقی ملک کوموروس کے صدر غزالی عثمان پر قاتلانہ حملہ کیا گیا تاہم وہ اس میں محفوظ رہے۔

میڈیارپورٹس کے مطابق عبوری صدر غزالی عثمان کی انتخابی مہم کے انچارج نے بتایا کہ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب صدر عثمان 24 مارچ کو ہونے والے صدارتی انتخابات کے لیے ایک جلسے سے خطاب کر رہے تھے۔

صدر غزالی عثمان کی انتخابی مہم کے نگران نے بتایا کہ پہاڑی علاقے کی چوٹی پر کسی نے دھماکہ خیز مواد رکھ دیا تھا۔جب صدرکا قافلہ اس علاقے سے گزرنے لگا تو وہ دھماکہ خیز مواد پھٹ گیا جس کے نتیجے میں پتھر لڑھک گئے تاہم اس حملے میں صدر غزالی عثمان محفوظ رہے ۔

انہوں نے کہا کہ صدر کی گاڑی مناسب وقت پررک گئی۔ صدر کے محافظوں نے بتایاکہ انہیں پہلے تو ایسے لگا کہ کسی نے میزائل حملہ کر دیا ہے۔دوسری جانب اپوزیشن نے کہا کہ صدر غزالی عثمان پر حملے کا واقعہ جزیرہ انجوان میں پیش آیا، تاہم صدر کو کوئی جانی نقصان نہیں ہوا اور وہ مکمل طور پر محفوظ ہیں۔خیال رہے کہ کوموروس میں گزشتہ برس 30 جولائی کو ہونے والے ایک ریفرنڈم کے بعد حالات کشیدہ ہیں۔

اس ریفرنڈم میں آئندہ مسلسل دو مرتبہ غزالی عثمان کو ملک کا صدر منتخب کرنے اور 2029 تک اقتدار پر فائز رہنے کی حمایت کی گئی تھی۔

(Visited 4 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *